نریندر مودی مقبوضہ کشمیر میں انسانی المیے کے ذمہ دار ہیں ٗ منموہن سنگھ

0
203

نئی دہلی، مارچ19(ٹی این ایس):سابق بھارتی وزیراعظم منموہن سنگھ نے وزیراعظم نریندر مودی کی حکومت کو مقبوضہ کشمیر میں انسانی المیہ میں مزید اضافے کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ مودی کو مقبوضہ کشمیر کے مسائل کا ادرک کرنا ہوگا ٗسیاسی جماعتوں کے نظریاتی ٹکراؤ کے باعث دونوں جماعتوں کی انتظامیہ ایک دوسرے کے مخالف کام کررہی ہیں ٗہماری سرحدیں اب محفوظ نہیں رہیں ۔بھارتی میڈیا این ڈی ٹی وی کے مطابق منموہن سنگھ نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے رہنما اور بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئیکہا کہ نریندر مودی کے برسراقتدار آتے ہی مقبوضہ کشمیر میں حریت پسندوں کی تحریک اور پرتشدد واقعات میں غیر معمولی اضافہ ہوگیا ہے۔انہوں نے نئی دہلی میں انڈین نیشنل کانگریس کے ابتدائی سیشن میں خطاب کرتے ہوئے واضح کیا کہ نریندر مودی کو مقبوضہ کشمیر کے مسائل کا ادرک کرنا ہوگا۔سابق وزیراعظم نے کہا کہ 2014 کے عام انتخابات میں پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) اور بی جے پی کے سیاسی اتحاد کی وجہ سے مقبوضہ کشمیر میں صورتحال میں شدت پیدا ہوئی۔انہوں نے واضح کیا کہ سیاسی جماعتوں کے نظریاتی ٹکراؤ کے باعث دونوں جماعتوں کی انتظامیہ ایک دوسرے کے مخالف کام کررہی ہیں۔خیال رہے کہ پی ڈی پی چاہتی ہے کہ حریت فورم کے چیئرمین میر واعظ عمر فاروق کے ساتھ مذاکرات کیے جائیں تاکہ خطے میں بڑھتے بھارت مخالف رویے کو روکنے کو مدد لے۔دوسری جانب بی جے پی نے بھارت مخالف احتجاج اور مظاہروں میں طاقت کا استعمال کرنے کی پالیسی پر گامزن ہے۔ منموہن سنگھ نے کہا کہ ہماری سرحدیں اب محفوظ نہیں رہیں، سرحد پار دہشت گردی، داخلی دہشت گردی اور انتہاپسندی وہ مسائل ہیں جن کے باعث بھارتی عوام کو شدید پریشانی لاحق ہے اور نریندر مودی کی حکومت مسائل کے ادراک کی صلاحیت نہیں رکھتی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here