سری لنکا(ٹی این ایس) پاکستان اور بھارت کا میچ بارش کی نزر,بے نتیجہ ختم

 
0
141

پاکستان اور بھارت کا میچ بارش کے باعث بے نتیجہ ختم ہو گیا۔
ایشیا کپ کے ہائی وولٹیج میچ میں بھارت نے پہلے کھیلتے ہوئے پاکستان کو 267 رنز کا ہدف دیا ہے لیکن بارش کے باعث پاکستان کو بیٹنگ کا موقع نہ ملا , سری لنکا کے شہر کینڈی میں کھیلے گئے ایشیا کپ کے اہم میچ میں بھارت نے پاکستان کے خلاف ٹاس جیت کر پہلے خود بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔ پاکستان کی جانب سے باؤلنگ کا آغاز شاہین شاہ آفریدی نے کیا اور ابتدائی اوورز میں بھارتی بلے بازوں نے پراعتماد انداز میں آغاز کرتے ہوئے چار اوورز میں کوئی وکٹ گرنے نہیں دی۔ تاہم اس موقع پر میچ میں بارش نے مداخلت کی جس کے سبب آدھے گھنٹے سے زائد تک کھیل رکا رہا۔ میچ دوبارہ شروع ہوا تو شاہین شاہ آفریدی زیادہ بہتر ردھم میں نظر آئے اور تیسری ہی گیند پر شاہین نے بھارتی کپتان روہت شرما کو بولڈ کر دیا۔ شاہین آفریدی نے نپی تلی باؤلنگ کا سلسلہ جاری رکھا اور اپنے اگلے اوور کی تیسری گیند پر ویرات کوہلی کی وکٹیں بکھیر کر اپنی ٹیم کو دوسری بڑی کامیاب دلائی۔ حارث رؤف کو باؤلنگ پر متعارف کرایا گیا تو شریاس آئیر نے ان کا استقبال دو چوکے لگا کر کیا لیکن اگلے اوور میں فاسٹ باؤلر نے اس کا بدلہ انہیں پویلین رخصت کر کے کیا اور بھارتی ٹیم 10 اوورز میں 48 رنز پر 3 وکٹیں گنوا بیٹھی تھی۔ شبمن گل پوری اننگز کے دوران جدوجہد کرتے نظر آئے اور بالآخر ان کی 32 گیندوں پر 10 رنز کی اننگز حارث رؤف کے ہاتھوں ہی اختتام کو پہنچی، جس کے باعث بھارت کو 66 رنزپر چوتھا نقصان پہنچا۔ نوجوان بلے باز ایشان کشن نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 7 چوکے اور ایک چھکا کی مدد سے 54 گیندوں پر اپنی نصف سنچری مکمل کی۔ دونوں کھلاڑیوں نے دباؤ میں عمدہ کھیل پیش کرتے ہوئے پانچویں وکٹ کے لیے 138 رنز کی شان دار شراکت قائم کی لیکن حارث رؤف نے ایک مرتبہ پھر ٹیم کو اہم کامیابی دلاتے ہوئے ایشان کشن کو چلتا کر دیا جنہوں نے آؤٹ ہونے سے قبل 82 رنز کی اننگز کھیلی۔ ہردک پانڈیا نے دوسرے اینڈ سے دھواں دھار بیٹنگ جاری رکھی اور حارث رؤف کو ایک اوور میں تین چوکے لگائے جس سے ایسا محسوس ہونے لگا کہ وہ اپنے ون ڈے کیریئر کی پہلی سنچری بنانے میں کامیاب رہیں گے لیکن شاہین شاہ آفریدی نے 87 رنز پر ان کی اننگز کے آگے فل اسٹاپ لگا دیا۔ رویندرا جدیجا سے بھی ساتھی کھلاڑی کی جدائی برداشت نہ ہو سکی اور وہ بھی صرف 14 رنز بنا کر چلتے بنے جبکہ اگلے اوور کی پہلی ہی گیند پر نسیم شاہ نے شردل ٹھاکر کا بھی کام تمام کر دیا۔ کلدیپ یادو اور جسپریت بمراہ نے اسکور 261 تک پہنچایا لیکن اسی اسکور پر اسپنر وکٹ کیپر کو کیچ دےکر پویلین لوٹ گئے۔ بمراہ نے نسیم شاہ کو چوکا لگایا اور اگلی گیند پر چھکا لگانے کی کوشش میں وہ باؤنڈری پر آغاسلمان کو کیچ دے بیٹھے۔ بھارت کی پوری ٹیم 266 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی، پاکستان کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی نے 4 جبکہ حارث رؤف اور نسیم شاہ نے تین، تین وکٹیں حاصل کیں۔ بھارت کی اننگز کے اختتام کے ساتھ ہی بارش نے میچ میں مداخلت کر دی اور گراؤنڈ گیلا ہونے کی وجہ سے میچ کافی دیر تک تاخیر کا شکار رہا۔ امپائرز نے کئی مرتبہ گراؤنڈ کا معائنہ کیا اور بالآخر مسلسل بارش اور گیلی آؤٹ فیلڈ کے باعث امپائرز نے دونوں کپتانوں کی باہمی رضامندی سے میچ ختم کرنے کا فیصلہ کیا۔ میچ بے نتیجہ ختم ہونے کی وجہ سے دونوں ٹیموں کو ایک، ایک پوائنٹ مل گیا ہے۔ اس سے قبل ٹاس جیتنے کے بعد بھارتی ٹیم کے کپتان روہت شرما نے کہا کہ موسم تھوڑا (ابر آلود) ہے لیکن ہم اس کے بارے میں زیادہ نہیں سوچ رہے، بنگلور میں ہمارا 6 روزہ کیمپ تھا جہاں ہم نے اپنی صلاحیتوں کو نکھارا۔ ان کا کہنا تھا کہ ایشیا کپ ایک معیاری ٹورنامنٹ ہے، جس میں اچھی ٹیمیں ہیں، ہمیں یہ سوچنے کی ضرورت ہے کہ ہم یہاں کیا کر سکتے ہیں۔ قومی ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہا کہ ہم بھی پہلے بیٹنگ کرنا چاہتے تھے، ہم نے گزشتہ ڈیڑھ مہینے کے دوران یہاں پر بہت کرکٹ کھیلی ہے، لہٰذا ہمیں کنڈیشن پتا ہے۔
موسم کی پیشن گوئی کرنے والی ایجنسی اکیو ویدر نے مقامی وقت کے مطابق سہ پہر 3 بجے بارش کا 58 فیصد امکان ظاہر کرتے ہوئے کہا تھا کہ اگلے 3 گھنٹے شام 6 بجے تک موسم صاف رہے تاہم 7 بجے سے دوبارہ بارش ہونے کا امکان ہے جو رات 11 بجے تک جاری رہ سکتی ہے۔ رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ دن کے وقت گھنے بادل چھائے رہیں گے اور ہوا میں نمی رہے گی، جس کے ساتھ بارش کا امکان ہے، شام کے وقت بارش اور بوندا باندی کے ساتھ موسم کافی حد تک ابر آلود رہنے کی توقع ہے۔ گرج چمک کے ساتھ بارش اور ہلکی ہوا کی پیش گوئی ہے، بارش کا 80 فیصد امکان 3 بج کر 30 منٹ پر ہے۔
بھارت کے خلاف پاکستانی پلیئنگ الیون:

فخر زمان، امام الحق، بابر اعظم، محمد رضوان، آغا سلمان، افتخار احمد، شاداب خان، محمد نواز، شاہین آفریدی، نسیم شاہ، حارث رؤف

پاکستان کے خلاف بھارت کی پلیئنگ الیون:

روہت شرما (کپتان)، شبمن گل، ویرات کوہلی، شریاس ایر، ایشان کشن، ہاردک پانڈیا، رویندرا جدیجا، شاردول ٹھاکر، کلدیپ یادیو، محمد سراج، جسپریت بمرا

ایشیا کپ کے لیے پاکستانی اسکواڈ:

عبداللہ شفیق، فخر زمان، امام الحق، بابر اعظم، سلمان علی آغا، افتخار احمد، سعود شکیل، محمد رضوان، محمد حارث، شاداب خان، محمد نواز، اسامہ میر، فہیم اشرف حارث رؤف، محمد وسیم جونیئر، نسیم شاہ، شاہین آفریدی

ایشیا کپ کے لیے بھارتی اسکواڈ:

روہت شرما، شبمن گل، شریاس ایر، سوریہ کمار یادو، تلک ورما، ویرات کوہلی، ایشان کشن، کے ایل راہول، اکسر پٹیل، ہاردک پانڈیا، رویندرا جدیجا، جسپریت بمراہ، کلدیپ یادو، محمد شامی، محمد سراج، پرسید کرشنا اور شاردول ٹھاکر