لاہور (ٹی این ایس) چودھری شجاعت حسین کی ایران کے اسرائیل پر جوابی حملے کی حمایت

 
0
285

شام میں ایرانی سفارتخانے پر اسرائیل کے حملے کا منہ توڑ جواب دینے پر چودھری شجاعت حسین نے ایران کے جوابی حملے کی حمایت کرتے ہوئے مبارکباد دے دی۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان مسلم لیگ کے سربراہ وسابق وزیراعظم چودھری شجاعت حسین نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ایران نے جوابی کارروائی کرنے کے لیے ہمت اور جرات کا مظاہرہ کیا، شام میں ایرانی سفارت خانے پر اسرائیلی حملے کی جوابی کاروائی پر ایران مبارکباد کا مستحق ہے، ایران کے حملے نے اسرائیل اور اس کے مغربی حمایتیوں کو حیران کر دیا ہے، پاکستان اور دیگر مسلم ممالک کو ایران کے ساتھ کھڑا ہونا چاہیے، امریکی پریس اسرائیل کو بتانا چاہیے کہ وہ غزہ میں بے گناہ فلسطینیوں کی نسل کشی بند کرے،

چودھری شجاعت حسین نے کہا کہ ایران کی جوابی کارروائیوں نے آج اسرائیل کی فوجی کمزوری کو بے نقاب کر دیا ہے، اسرائیل اخلاقی، قانونی، سیاسی، نفسیاتی اور سفارتی طور پر ہار گیا ہے، میں ایران کے اپنے دفاع کے حق میں جوابی کاروائی کی حمایت کرتا ہوں، ایران نے اسرائیل کے ظلم کی مخالفت کی ہے، اسرائیل انسانیت کا دشمن ہے، 2005 میں صدر جارج بش کے دورہ پاکستان کے موقع پر مجھے بھی سرکاری ضیافت میں مدعو کیا گیا لیکن میں نے شرکتے کرنے سے انکار کر دیا، میں ایسے شخص سے نہیں ملنا چاہتا تھا جو مسلم دنیا میں اتنی اموات کا ذمہ دار تھا، پاکستان اور دیگر ممالک کو غزہ میں فوری جنگ بندی کے لیے کام کرنا چاہیے،